بِسمِ اللہِ الرَّحمٰنِ الرَّحِيم

02-April-2020

چین سے پاکستانیوں کو نکالنے کے فیصلے پر نظر ثانی کی جائے

masooma mufferih masooma mufferih
75 Views 0 2 مہینے
چین میں پھنسے پاکستانی طلبا کا معاملہ وفاقی کابینہ میں لانے کا حکم
pakistan today
Posted at 11 فروری-2020

چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ اطہر من اللہ کا کہنا ہے کہ چین سے پاکستانیون کو نہ نکالنے کے فیصلے پر نظر ثانی کی جائے۔

اسلام آباد ہائیکورٹ میں چین سے پاکستانی شہریوں کو نکالنے کی درخواست پر سماعت ہوئی۔ وزارت صحت اور وزارت خارجہ کے نمائندے عدالت میں پیش ہوئے اور وزارت خارجہ کے ڈائریکٹر جنرل(ڈی جی) چائنہ نے تحریری رپورٹ عدالت میں پیش کی۔

سماعت کے دوران چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ نے کہا کہ دیگر ممالک اپنے شہریوں کو چین سے نکال رہے ہیں لیکن ہم اپنے شہریوں کو چین سے کیوں نہیں نکال رہے۔

حکومتی نمائندے نے عدالت کو بتایا ک ہ 194 میں سے صرف 23 ممالک نے چین سے اپنے شہریوں کو نکالا ہے۔ جس پر جسٹس اطہر من اللہ نے کہا کہ اگر 23 ممالک اپنے شہریوں کو نکال سکتے ہیں تو پاکستان کیوں نہیں نکال سکتا؟ ان ممالک نے کون سے اقدامات کئے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ چین میں پاکستانی طلبا محصور ہیں۔ آسٹریلیا نے اپنے شہریوں کو کسی آئی لینڈر پر رکھا ہے تو آپ ان کو گوادر پر رکھ سکتے ہیں۔ ہم یہ نہیں کہہ رہے کہ حکومت شہریوں کے تحفظ میں سنجیدہ نہیں ہے۔ حکومت نے پاکستان میں موجود 20 کروڑ افراد کو سامنے رکھ کر فیصلہ کرنا ہے۔

وزارت خارجہ کے نمائندے نے کہا کہ چین سے مسافروں کی آمدورفت پر پابندی نہیں، ائیرپورٹس پر مسافروں کی اسکریننگ کی جا رہی ہے۔ چین نے ووہان شہر مکمل لاک ڈاون کر رکھا ہے۔ چینی وزیرخارجہ نے یقین دہانی کرائی ہے کہ وہاں پر پاکستانیوں کا خیال رکھا جائے گا۔

چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ نے کہا کہ اگر پاکستان اپنے طلبا کو وہاں سے نکالات اہے تو کیا چین کے ساتھ ہمارت تعلقات متاثر ہوں گے۔ جس پر وزارت خارجہ کے نمائندے نے کہا کہ صورتحال کا جائزہ لیا جا رہا ہے جو بھی فیصلہ کریں گے وہ ملک اور طلبا کے مفاد میں ہی ہو گا۔

انہوں نے کہا کہ چینی حکام سے بات کی ہے کہ ہمارے نمائندے کو ووہان شہر جانے کی اجازت دی جائے جس پر چین کا کہنا ہے کہ ہم کسی قسم کا رسک نہیں لے سکتے۔

جسٹس اطر من اللہ نے کہا کہ ریاست پاکستان حلفیہ بیان دے گی کہ اگر کچھ ہوا تو زمہ دار کون ہو گا؟ ہم چاہتے ہیں کہ ریاست اپنے شہریوں کی ہر طرح سے ذمہ داری لے، اگر کسی کو کچھ ہوا تو اس کا ذمہ دار کون ہو گا؟

چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ نے وزارت خارجہ کے نمائندے نے کہا کہ چین سے پاکستانی شہریوں کو نہ نکالنے کےفیصلے پرنظرثانی کریں، ہم کوئی حکم نہیں دے رہے،آپ دو ہفتوں کا وقت لے لیں۔

متعلقہ خبریں

ڈینیل پرل قتل کیس، احمد شیخ کی سزائے موت 7 سال قید…

سندھ ہائیکورٹ نے امریکی صحافی ڈینئیل پرل کے قتل کے مجرم برطانوی شہری احمد عمر شیخ کی سزائے…

5 گھنٹے
ڈینیل پرل قتل کیس، احمد شیخ کی سزائے موت 7 سال قید میں تبدیل

عدالت عظمٰی کا جیل جانیوالے نئے قیدیوں کیلئے کورونا ٹیسٹ لازمی قرار

چیف جسٹس گلزار احمد نے سپریم کورٹ میں اانڈر ٹرائل قیدیوں کی رہائی کیس کی سماعت کے دوران…

15 گھنٹے
عدالت عظمٰی کا جیل جانیوالے نئے قیدیوں کیلئے کورونا ٹیسٹ لازمی قرار

ایران سے زائرین پاکستان واپس لانے کی درخواست مسترد

اسلام آباد ہائیکورٹ نے ایران میں پھنسے زائرین کو پاکستان واپس لانے سے متعلق درخواست ناقابل سماعت قرار…

19 گھنٹے
ایران سے زائرین پاکستان واپس لانے کی درخواست مسترد

سپریم کورٹ نے قیدیوں کو رہا کرنے سے روک دیا

سپریم کورٹ نے کورونا وائرس کے پھیلاو کے پیش نظرقیدیوں کو ضمانت پر رہا کرنے سے روک دیا۔…

3 دن
سپریم کورٹ نے قیدیوں کو رہا کرنے سے روک دیا

تازہ ترین

موڈیز نے پاکستان کی معاشی ترقی کی شرح 2.5 فیصد رہنے کا…

عالمی کریڈٹ ریٹنگ ایجنسی موڈیز نے پاکستان کی معاشی ترقی کی شرح 2 سے ڈھائی فیصد تک رہنے…

5 گھنٹے
موڈیز نے پاکستان کی معاشی ترقی کی شرح 2.5 فیصد رہنے کا امکان ظاہر کردیا

ڈینیل پرل قتل کیس، احمد شیخ کی سزائے موت 7 سال قید…

سندھ ہائیکورٹ نے امریکی صحافی ڈینئیل پرل کے قتل کے مجرم برطانوی شہری احمد عمر شیخ کی سزائے…

5 گھنٹے
ڈینیل پرل قتل کیس، احمد شیخ کی سزائے موت 7 سال قید میں تبدیل

کیمبرج اسکول سسٹم کا بغیرامتحانات بچوں کو پاس کرنے کا اعلان

کیمبرج اسکول سسٹم نے کورونا وائرس کے باعث صورتحال کے پیش نظر بچوں کوبغیر امتحان کے پاس کرنے…

4 گھنٹے
کیمبرج اسکول سسٹم کا بغیرامتحانات بچوں کو پاس کرنے کا اعلان

پی آئی اے کو جزوی بین الاقوامی پروازوں کی اجازت

اسلام آباد۔ حکومت پاکستان کی جانب سے 21 مارچ کو اپنی تمام ملکی اور غیر ملکی فضائی آپریشن…

9 گھنٹے
پی آئی اے کو جزوی بین الاقوامی پروازوں کی اجازت

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے