بِسمِ اللہِ الرَّحمٰنِ الرَّحِيم

20-May-2019

میر کیا صدا ہے، بیمار ہوئے جس کے سبب اسی عطار کے لونڈے سے دوا لیتے ہیں

71 Views 0 3 دن
پاکستانی معیشت کو جھٹکے
Posted at 17 مئی-2019

Tariq Munir Butt

کراچی۔ پاکستانی معیشت بڑی ڈھیٹ نام کی چیز ہے ہر حکمران نے اسے یتیم سمجھ کر بھاری قرضوں کے بوجھ تلے مزید دبایا مگر حیرت ہے کہ آج بھی اتنے بوجھ کے باوجود چلتی ہی جا رہی ہے۔ اسے معیشت کی دنیا کا ایک عجوبہ ہی کہا جا سکتا ہے۔ ہچکولے پہ ہچکولہ کھاتی معیشت صرف غریبوں کیلئے ہے۔ سارا بوجھ انہی پر ڈالنے کی نوید سنائی جاتی ہے۔ ”میر کیا صدا ہے، بیمار ہوئے جس کے سبب اسی عطار کے لونڈے سے دوا لیتے ہیں “۔

حکمرانوں اور امراء جنہوں نے اسے اس حالت میں پہنچایا اب بھی معیشت کو ٹریک پر لانے کے نام پر مزید سہولتیں انہی کو دی جا رہی ہے۔ ویسے بھی معیشت دباؤ میں ہے تو اس مشکل میں بیچارے غریب ہی قربانی دے سکتے ہیں۔ امراء تو دولت سمیٹنے کیلئے ہوتے ہیں۔ آئی پی ٹی آئی کی حکومت بھی انہی کے ناز نخرے اٹھا رہی ہے۔

Courtesy 24 News

غیر ملکی ذخائر 10 بلین کی کم ترین سطح پر آ گئے

اب تو امراء کو منانے اور گارنٹی کیلئے انہیں بیرون ملک سے معیشت دانوں کی ٹیم لانا پڑی جو انہیں ضمانت بھی دے رہی ہے کہ بھائی فکر نہ کرو اب ہم تمہارا تحفظ کریں گے اور سارا خون غریبوں کا نچوڑیں گے۔غیر ملکی معیشت دانوں کی ٹیم پورے لاؤلشکر کے ساتھ اہم سیٹوں پر براجمان ہو چکی ہے اور امرا کو یقین دہانیاں کرا رہی ہے۔ غریبوں کیلئے صرف تسلیاں ہیں کہ ہم آپ کیلئے اس ٹرم میں نہ سہی اگلی ٹرم میں پچاس لاکھ گھر اور ایک کروڑ نوکریاں دیں گے۔

غیر ملکی معیشت دانوں کی ٹیم پورے لاؤلشکر کے ساتھ اہم سیٹوں پر براجمان

Courtesy UrduPoimt

اب نئی معاشی ٹیم نے معیشت کو انجکشن لگا کر وقتی سہارا دینا بھی شروع کر دیا مگر بھنور میں پھنسی ہوئی معیشت کو اس سے نکالنے کیلئے ان کے پاس بھی کوئی جامع پروگرام دکھائی نہیں دیتا۔ سوائے غریب عوام پر مزید بوجھ ڈالنے کے۔ ہر حکمران نے غیر ملکی قرضے لیتے ہوئے ہمیشہ یہ دعویٰ کیا کہ ہم آخری مرتبہ آئی ایم ایف کے پاس جا رہے ہیں۔

پاکستان 22ویں مرتبہ آئی ایم ایف کے چنگل میں جا چکا ہے

حالانکہ اب تک پاکستان 22ویں مرتبہ آئی ایم ایف کے چنگل میں جا چکا ہے مگر پھر بھی یہ دعویٰ کیا جاتا ہے کہ ہم آخری مرتبہ اس کے پروگرام میں گئے ہیں۔ اتنے سارے اقدامات کے باوجود بیچاری معیشت غیر ملکی قرضہ لینے کے باوجود ٹریک پر آتی دکھائی نہیں دے رہی۔ البتہ مشیر خزانہ عبدالحفیظ شیخ اب بھی اسے بھنور سے نکالنے کیلئے بڑے پرعزم دکھائی دیتے ہیں۔

ماضی میں پی پی کی حکومت کو بھی انہی کی کوششوں سے نجات ملی تھی۔ تب دودھ اور شہد کی نہریں نکالنے کا کام بھی انہی سے منسوب ہے۔ وزیراعظم کو یقین ہے کہ وہ آٰصف زرداری کی طرح انہیں بھی مشکلات کی بھنور سے نکال لیں گے۔ اس کا عملی مظاہرہ گورنر سندھ عمران اسماعیل کے ساتھ کراچی میں ایک پریس کانفرنس کے ذریعے کر دیا ہے۔

اب بھی ہمارے پاس ذخائر میں 10 ملین ڈالر ہیں

اس پریس کانفرنس میں قوم کو پہلی خوشخبری یہ سنائی ہے کہ بھائیوں گھبرانا نہیں۔ اب بھی ہمارے پاس غیر ملکی ذخائر میں 10 ملین ڈالر ہیں۔ عالمی بنک اور ایشیائی ترقیاتی بنک سے مزید کم شرح پر دو سے تین بلین ڈالر ملیں گے۔ گو معیشت کا خسارہ بہت زیادہ ہے۔ شرح نمو کم اور مہنگائی بڑھ رہی ہے مگر ہم معیشت کو پاؤں پر کھڑا کریں گے۔

ہماری تاجروں کے ساتھ بجٹ کے معاملے پر بات ہوئی ہے۔ انہیں آئی ایم ایف کے ساتھ معاہدے پر اعتماد میں لے لیا ہے۔ بجٹ میں اولین ترجیح عام آدمی کو ریلیف دینا ہے۔ وزیراعظم نے بھی ہدایت کی ہے کہ تمام پالیسی عوام کے مفاد میں بنائی جائیں۔ ویسے بھی اب غریب دوست بجٹ بنانا پی ٹی آئی حکومت کیلئے کوئی مشکل کام نہیں۔

پی ٹی آئی کی حکومت آنے سے پہلے ملکی قرض 31 ہزار ارب روپے تھا

پچھلے نو ماہ میں ایک سے زائد مرتبہ ضمنی بجٹ دے چکے ہیں۔ اب آگے بھی ضرورت پڑی تو اس مشکل ٹاسک کو پورا کریں گے۔ ان کا یہ بھی فرمانا ہے کہ پی ٹی آئی کی حکومت آنے سے پہلے ملکی قرض 31 ہزار ارب روپے تھا مگر غریبوں کو ایک اور خوشخبری سنائی ہے کہ بجلی کی قیمت بڑھی تو غریب اس سے متاثر نہیں ہو گا۔ 300 یونٹ استعمال کرنیوالوں پر بوجھ نہیں ڈالیں گے۔

یہ تو خیر جملہ معترضہ ہے۔ انہیں اب بھی پورا یقین ہے کہ اگرقوم کو ضرورت پڑی تو 75 فیصد 300 یونٹ استعمال کرنیوالے آئندہ بھی قربانی دینے کیلئے تیار ہیں۔ پاکستانی تاریخ کے 70 سال اس بات کے گواہ ہیں۔

متعلقہ خبریں

اسٹیٹ بنک کا دو ماہ کیلئے مانیٹری پالیسی…

کراچی۔ آئی ایم ایف کے پروگرام میں جانے کے بعد شرح سود میں اضافہ کی پیش گوئی کی…

5 گھنٹے
اسٹیٹ بنک کا دو ماہ کیلئے مانیٹری پالیسی کا اعلان

ٹرمپ کے ایگزیکٹو آرڈر نے جلتی پر تیل…

شنگھائی۔ چین اورامریکہ کے درمیان بڑھتے ہوئے معاشی جنگ میں روز بروز اضافہ ہو رہا ہے۔ چینی انڈسٹریز…

6 گھنٹے
ٹرمپ کے ایگزیکٹو آرڈر نے جلتی پر تیل کا کام کر

مسلمانوں کو چرچ میں رمضان کے دوران عبادت…

لندن۔ درہم کی ایک چرچ کی جانب سے مسلمانوں کیلئے رمضان المبارک میں عبادت کی اجازت دینے کے…

6 گھنٹے
مسلمانوں کو چرچ میں رمضان کے دوران عبادت کی اجازت دیکر فیصلہ واپس لے لیا

گاڑیوں میں سیفٹی بیگ نصب کرنے کا مطالبہ

لاہور۔ ہمارے پنجاب اسمبلی کے کئی اراکین ایسے ہیں جنہیں خیر سے کبھی تقریر کرنے کی توفیق نہیں…

7 گھنٹے
گاڑیوں میں سیفٹی بیگ نصب کرنے کا مطالب

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے