بِسمِ اللہِ الرَّحمٰنِ الرَّحِيم

18-September-2019

معاشی اور ٹیکس پالیسیوں سے اختلاف پر تاجروں کا آج ملک گیر ہڑتال کا اعلان

287 Views 0 2 مہینے
معاشی اور ٹیکس پالیسیوں سے اختلاف پر تاجروں کا آج ملک گیر ہڑتال کا اعلان ل
Posted at 13 جولائی-2019

لاہور۔ حکومت کے آئی ایم ایف پروگرام میں جانے، ٹیکسوں کی بھرمار اور معاشی و اقتصادی پالیسیوں سے اختلاف کی بنا پر آج تاجروں نے ملک گیر ہڑتال کا اعلان کیا ہوا ہے۔ ملک بھر کے تمام شہروں میں شٹر ڈاؤن کا منصوبہ تیار کر لیا گیا ہے۔ تاہم تاجر تنظیمیں ہڑتال کے معاملے پر دو حصوں میں تقسیم ہو چکی ہے۔ ایک گروپ ہڑتال کی حمایت اور دوسرا مخالفت کر رہا ہے۔

چیئرمین ایف بی آر شبر زیدی کا کہنا ہے کہ ملک گیر شٹرون ہڑتال کے پیچھے کونسی جماعت ہے۔ اس کا نام نہیں لوں گا لیکن ہمیں بخوبی پتہ ہے کہ کون کس کے اشاروں پر ہڑتال کر رہا ہے۔ اس پر آل پاکستان انجمن تاجران نے چیئرمین بی آر شبر زیدی کو مناظر کا چیلنج دیتے ہوئے کہا ہے کہ تاجروں کے پیچھے کوئی سیاسی جماعت نہیں ہے حتٰی کہ پی ٹی آئی کی تاجر تنظیمیں بھی ہمیں سپورٹ کر رہی ہیں۔

Courtesy Twitter

وزیراعظم فکسڈ ٹیکس کا نظام لے آئیں ہم تیار ہیں

یہ کسی ایک تاجر تنظیم کا نہیں بلکہ تمام تاجروں کا یکساں معاملہ ہے۔ ملک بھر کی طرح وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں بھی آل پاکستان انجمن تاجران نے آج شٹر ڈاؤن ہڑتال کا اعلان کر رکھا ہے۔ صدر آل پاکستان انجمن تاجران اجمل بلوچ نے اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ وزیراعظم فکسڈ ٹیکس کا نظام لے آئیں ہم تیار ہیں مگر یہ تاثر بالکل غلط ہے کہ تاجر احتجاج کسی سیاسی جماعت کی ایما پر کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ بیوروکریسی حکومت اور وزیراعظم کو ناکام بناچاہتی ہے۔

آج لاہور کی تمام مارکیٹیں اور دکانیں بند رہیں گی

ادھر لاہور میں بھی حکومتی معاشی پالیسیوں کیخلاف تاجر سراپا احتجاج ہیں۔ تاجر برادری نے لاہور میں بھی شٹر ڈاؤن ہڑتال کا اعلان کر رکھا ہے۔ انجمن تاجران کے اعلامیے کے مطابق آج لاہور کی تمام مارکیٹیں اور دکانیں بند رہیں گی۔ البتہ صوبہ سندھ میں حکومتی معاشی پالیسیوں پر تاجر تنظیمیں دو دھڑوں میں تقسیم ہو گئی ہیں۔ تاجر ایکشن کمیٹی حکومت کی حمایت کر رہی ہے۔

سندھ میں تاجر تنظیمیں دو دھڑوں میں تقسیم

اس کا کہنا ہے کہ حکومت نے 11 میں سے 10 مطالبات مان لئے ہیں لہٰذا ہڑتال کا کوئی جواز نہیں بنتا۔ تاجر ایکشن کمیٹی کا دعویٰ ہے کہ کراچی کی اکثریتی تاجر تنظیمیں ان کے ساتھ ہیں۔ آج ہڑتال کرنیوالے ایک سیاسی جماعت کی ایما پر ہڑتال کر رہے ہیں۔

ان کا کہنا ہے کہ چیئرمین ایف بی آر شبر زیدی نے تاجروں کو فکسڈ ٹیکس کی یقین دہانی کرائی ہے۔ چھوٹے تاجروں کے آڈٹ کی توسیع ایک سے بڑھا کر تین سال کر دی گئی ہے۔ حکومت ہماری ہر بات مان رہی ہے تو پھر ہڑتال کا کیا جواز ہے۔

متعلقہ خبریں

العزیزیہ ریفرنس میں نواز شریف کی اپیل پر سماعت کل ہوگی

برطانیہ کی ڈیجیٹل فارنزک آرگنائزیشن نے احتساب عدالت کے سابق جج ارشد ملک کی آڈیو ویڈیو کو اصلی…

3 گھنٹے

امریکہ جاپان میں پاکستانی لڑکوں کی مانگ کیوں

پاکستان بارے نہ جانے کیوں دشمن افواہیں پھیلاتا رہتا ہے یہاں کے لڑکے تو ایسے بھلے مانس ہیں…

5 گھنٹے

شہباز شریف کے بیٹے کی پرویز مشرف سے لندن میں ملاقات

پاکستان مسلم لیگ ن کے صدر شہباز شریف کے بیٹے سلمان شہباز نے سابق صدر پرویز مشرف سے…

9 گھنٹے

وزیراعلی سندھ نیب آفس حاضر ہو

قومی احتساب بیورو (نیب) کراچی نے وزیرِ اعلی سندھ مراد علی کو جعلی اکاؤنٹس کیس میں کل طلب…

1 دن

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے