بِسمِ اللہِ الرَّحمٰنِ الرَّحِيم

17-June-2019

کرپشن ختم کر کے اداروں میں میرٹ کی بنیاد رکھیں گے

39 Views 0 6 دن
رواں سال ٹیکس کولیکشن کا ہدف 5550 ارب رکھا ہے
Posted at 11 جون-2019

اسلام آباد۔ سال 2019-20ء کا بجٹ وفاقی حکومت کیلئے ایک کڑا امتحان تھا۔ اب پی ٹی آئی حکومت اپنے پہلے بجٹ میں ں کتنا سرخرو ہوئی۔ اس کا فیصلہ تو آنیوالے دنوں میں ہو گا۔ ماہرین معیشت اپنے اپنے تبصروں میں بھی اس پر اپنی رائے پیش کریں گے۔ مالی سال 2019-20ء کا بجٹ آج وزیر مملکت برائے ریونیو حماد اظہر نے پیش پارلیمنٹ میں پیش کیا۔

انہوں نے کہا کہ مالی بحران کا سب کو اندازہ ہونا چاہئے کہ وفاقی بجٹ بناناکتنا مشکل تھا۔ کرپشن ختم کر کے اداروں میں شفافیت اور میرٹ کی بنیاد رکھیں گے۔ پی ٹی آئی نے اقتدار سنبھالا تو ورثے میں بحران کی شکار معیشت ملی۔ ہم نے کرپشن پر کاری قدغن لگا کر اداروں میں میرٹ کی بنیاد رکھی۔ نئے پاکستان کا نعرہ لگا کر نئی سوچ کے ساتھ اقتدار میں آئے ہیں۔

Courtesy Dunya Tv

دفاعی بجٹ پر کوئی سمجھوتہ نہیں کریں گے

بجٹ میں رضاکارانہ کمی کرنے پر آرمی چیف قمر جاوید باجوہ کے شکر گزار ہیں مگر دفاعی بجٹ پر کوئی سمجھوتہ نہیں کریں گے۔ قومی اسمبلی میں بجٹ پیش کرتے ہوئے حماد اظہر نے کہا کہ مالی سال 2019-20ء کا 7022 ارب روپے کا بجٹ پیش کر رہے ہیں۔ وفاقی حکومت کے ملازمین کی تنخواہ میں 10 فیصد اضافہ کیا جا رہا ہے۔ ریٹائرڈ ملازمین کی پنشن میں بھی 10 فیصلہ اضافہ کیا ہے۔ گریڈ ایک سے 16 گریڈ کے ملازمین کی تنخواہوں میں 10 فیصد اضافہ ہو گا۔

گریڈ 21 سے 22کے ملازمین کی تنخواہوں میں اضافہ نہیں ہو گا

گریڈ 17 سے 20 تک کی تنخواہ میں 5 فیصد اضافہ کیا ہے۔ گریڈ 21 سے 22کے ملازمین کی تنخواہوں میں اضافہ نہیں ہو گا۔ کابینہ کے تمام وزراء نے رضاکارانہ طور پر اپنی تنخواہوں میں 10 فیصد کمی کا فیصلہ کیا ہے۔ وفاقی حکومت نے سرکاری ملازمین کی کم از کم تنخواہ 17500 مقرر کی ہے۔ یہ فیصلہ 2017ء سے جاری تنخواہ پر ہو گا۔ انہوں نے مزید کہا کہ وفاقی بجٹ کا خسارہ 3 ہزار 137 ارب روپے ہے۔

رواں سال ٹیکس کولیکشن کا ہدف 5550 ارب رکھا ہے

دفاعی بجٹ 1150 ارب روپے برقرار رہے گا۔ جی ایس ٹی کی شرح 17 فیصد برقرار رکھی گئی ہے۔ بیکری اور ہوٹل میں استعمال ہونیوالی اشیاء پر جی ایس ٹی ساڑھے چار فیصد ہو گا۔ وفاقی حکومت نے ایف بی آر کیلئے رواں سال ٹیکس کولیکشن کا ہدف 5550 ارب رکھا ہے۔ پاکستان میں جی ڈی پی کی شرح خطے کے دیگر ممالک میں سب سے کم ہے۔

بجلی کے کل 3 لاکھ 44 ہزار کنکشن میں سے صرف 40 ہزار سیلز ٹیکس میں رجسٹرڈ ہیں۔ ٹیکس کے نظام میں مزید بہتری لائیں گے۔ نیشنل فنانس کمیشن کے تحت صوبوں کیلئے 3 ہزار 255 ارب روپے ریونیو رکھا گیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پچھلی حکومتوں نے ٹیکس کولیکشن کی وصولی میں مجرمانہ غفلت کا مظاہرہ کیا۔ ملکی آبادی میں صرف 19 لاکھ افراد ٹیکس دیتے ہیں۔

متعلقہ خبریں

صوبائی وزیر لائیو سٹاک سندھ عبدالباری پتافی مستعفی…

کراچی۔ گھوٹکی 205 سے پیپلز پارٹی کے امیدوار محمد بخش مہر کے کورننگ امیدوار صوبائی وزیر لائیو سٹاک…

5 گھنٹے
اس نشست پر انتخاب 18 جولائی کو منعقد ہو گا

بھارت کے ہاتھوں ورلڈکپ میں مسلسل ساتویں شکست…

لندن۔ ایک دور میں بھارتی ٹیم پاکستان کے ہاتھوں پہ در پے شسکتوں کے بوجھ تلے دبی ہوئی…

6 گھنٹے
بھارت کے ہاتھوں ورلڈکپ میں مسلسل ساتویں شکست پر پاکستانی شائقین سراپا احتجاج

بلاول بھٹو زرداری آج مولانا فضل الرحمان سے…

اسلام آباد۔ اپوزیشن رہنماؤں کی گرفتاریاں اور عوام دشمن بجٹ کو ناکام بنانے کیلئے اپوزیشن رہنماؤں کے درمیان…

6 گھنٹے
بلاول بھٹو زرداری آج مولانا فضل الرحمان سے ملکی صورتحال پر اہم ملاقات کریں گے

وزیراعظم عمران خان کا روزانہ پارلیمنٹ ہاؤس میں…

اسلام آباد۔ قفل ٹوٹا خدا خدا کر کے۔ وزیراعظم پاکستان عمران نے بالاخر روزانہ پارلیمنٹ میں آنے اور…

7 گھنٹے

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے