بِسمِ اللہِ الرَّحمٰنِ الرَّحِيم

22-July-2019

چودھری برادران کیخلاف نیب کا شکنجہ ڈھیلا پڑ گیا

222 Views 0 3 مہینے
Posted at 30 اپریل-2019

لاہور۔ چودھری برادران خوش قسمت ہیں کہ ان پر نیب کا شکنجہ پھر ڈھیلا پڑ گیا حالانکہ نیب دھڑ دھڑ اپنے مخالفین پر شکنجہ ٹائٹ کررہی ہے۔ آئے روز مختلف شخصیات کو نیب طلب کر کے ان کیخلاف کیسز تیار کر رہی ہے۔ بہرحال چودھری برادران کو ایک کریڈٹ ضرور جاتا ہے کہ سیاست میں رواداری کو انہی کے دور میں زیادہ فروغ ملا۔ اب اپوزیشن کی جانب سے چودھری برادران کیخلاف نیب انکوائری بند کرنے پر تحفظات ظاہر کئے جا رہے ہیں۔ خاص طور پر ن لیگی رہنماء اسے نیب کا جانبدارانہ اقدام قرار دے رہے ہیں۔


دوران تحقیق پتہ چلا کہ یہ پلاٹس چودھری برادران کے ملازم نے خریدے

چودھری برادران کیخلاف نیب انکوائری بند کرنے کا حکم احتساب عدالت کے جج جواد الحسن نے دیا۔ چودھری برادران پر ایل ڈی اے سٹی میں 28 پلاٹس کے غیر قانونی خریداری کی تحقیقات چل رہی تھیں۔ چودھری شجاعت سے بھی 28 پلاٹس سے متعلق تحقیقات کی گئیں۔ دوران تحقیق پتہ چلا کہ یہ پلاٹس چودھری برادران کے ملازم نے خریدے۔ ان کا 28 پلاٹس سے کوئی تعلق ثابت نہ ہو سکا۔ نیب نے چودھری شجاعت حسین اور چودھری پرویز الہٰی کیخلاف پلاٹوں کی انکوائری بند کرنے کی سفارش کی تھی۔

متعلقہ خبریں

طالبان کو جنگ بندی پر راضی کرنے کیلئے…

اسلام آباد۔ اگلے سال امریکہ کا صدارتی انتخاب ہونے جا رہاہے۔ صدر ٹرمپ دوسری ٹرم کیلئے امریکی صدر…

6 گھنٹے
طالبان کو جنگ بندی پر راضی کرنے کیلئے امریکہ پاکستان کے کردار کا خواہش مند

واٹس ایب پر تفتیشی پولیس افسران کو ہیبت…

لاہور۔ نیب لاہور پنجاب پولیس کیخلاف گجرات، ساہیوال اور شیخوپورہ ریجنز میں حکومتی خزانے کو اربوں روپے کا…

7 گھنٹے
واٹس ایب پر تفتیشی پولیس افسران کو ہیبت ناک نتائج کی دھمکیوں کا انکشاف

مون سون بارشوں کی وجہ سے دریاؤں کے…

مظفر آباد۔ مون سون کا آغاز ہوتے ہی آزاد کشمیر کے دریاؤں میں ابال آنا شروع ہو جاتا…

7 گھنٹے
مون سون بارشوں کی وجہ سے دریاؤں کے کنارے رہنے والے کشمیری رہائشیوں کیلئے وا رننگ

چیئرمین سینیٹ نہ بنایا تھا اور نہ اب…

اسلام آباد۔ سابق صدر آصف زرداری کے بارے میں مشہور ہے کہ وہ زبان کے پکے ہیں۔ شاید…

8 گھنٹے
چیئرمین سینیٹ نہ بنایا تھا اور نہ اب اتار رہے ہیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے