بِسمِ اللہِ الرَّحمٰنِ الرَّحِيم

18-July-2019

نوازشریف کی ضمانت میں توسیع کی درخواست مسترد

251 Views 0 3 مہینے
نوازشریف کی ضمانت میں توسیع کی درخواست مسترد
Posted at 3 مئی-2019


اسلام آباد۔ چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس آصف سعید کھوسہ کی سربراہی میں تین رکنی بنچ نے العزیزیہ ریفرنس میں نواز شریف کی سزا معطلی اور ضمانت میں توسیع کی نظرثانی کی درخواست مسترد کر کے انہیں چھ ہفتوں کی ضمانت کی مدت مکمل ہونے پر دوبارہ جیل بھجوانے کا حکم سنا دیا۔

نوازشریف کی جانب سے انہیں طبی بنیادوں پر ضمانت اور بیرون ملک علاج کیلئے جانے کی استدعا کی گئی تھی۔ اس پر چیف جسٹس کا کہنا ہے کہ پاکستانی ہسپتانوں میں علاج کی بہترین سہولیات میسر ہے جہاں ان کا علاج ہو سکتا ہے۔

پاکستانی ہسپتانوں میں بہترین سہولیات میسر ہے

اس فیصلے سے پہلے ہی قانونی ماہرین کی جانب سے یہ پیش گوئی کی گئی تھی کہ نوازشریف العزیزیہ کیس میں سزا یافتہ ہیں لہٰذا عدالت کسی مجرم کو بیرون ملک چاہئے علاج کیلئے جانے کی اجازت نہیں دے سکتی۔ اس حوالے سے ڈاکٹر عاصم اور سابق صدر پرویز مشرف کی مثال پیش کی جاتی تھی۔ اس پر قانونی ماہرین کا موقف ہے کہ دونوں کو کسی بھی مقدمے میں سزا نہیں ہوئی لہٰذا ان کو بیرون ملک جانے کی اجازت ملی۔

انہیں جو طبی سہولیات درکار ہیں وہ پاکستان میں ممکن نہیں

قبل ازیں نواز شریف کے وکیل خواجہ حارث نے سپریم کورٹ میں دلائل دیتے ہوئے کہا کہ نوازشریف کی حالت مزید پتلی ہو گئی ہے اور بیماری کی وجہ سے مزید پیچیدگیاں پیدا ہو رہی ہیں۔ انہیں جو طبی سہولیات درکار ہیں وہ پاکستان میں ممکن نہیں ہیں۔ ضمانت کے دوران ان کا ہائپرٹینشن اور شوگر کا علاج ہوا ہے۔ اس پر چیف جسٹس نے کہا کہ ڈاکٹرز نے انجیوگرافی کی سفارش کی تھی۔

نوازشریف کو پورا پیکیج دیا گیا تھا

اسی بنیاد پر انہیں ضمانت دی گئی۔ چیف جسٹس نے مزید کہا کہ فیصلے میں نوازشریف کو پورا پیکیج دیا گیا تھا۔ ان کے پاس تمام قانونی آپشن موجود ہیں۔ پاکستان میں علاج کیلئے بہترین ڈاکٹرز موجود ہیں۔ ہم نے ضمانت علاج کیلئے دی تھی ٹیسٹ کرانے کیلئے نہیں، 6 ہفتوں میں انکی انجیوگرافی بھی نہیں ہوئی۔

صرف سزائے موت کے مقدمہ میں سزا معطل ہوتی ہے

چیف جسٹس نے کہا کہ ہر چیز کو سیاسی رنگ دینا درست نہیں۔ صرف سزائے موت کے مقدمہ میں ہی سزا معطل ہوتی ہے۔ عدالتی حکم میں کہا گیا ہے کہ اگر نواز شریف نے سرنڈر نہ کیا تو ان کی گرفتاری ہو گی۔ سماعت کے بعد عدالت عظمٰی نے نوازشریف کی ضمانت میں توسیع کی درخواست مسترد کر دی۔

واضح رہے 26 مارچ کو سپریم کورٹ نے نوازشریف کی میڈیکل بنیادوں پر 6 ہفتوں کی عبوری ضمانت منظور کی تھی اور ان کے بیرون ملک جانے پر پابندی عائد کی تھی۔

متعلقہ خبریں

جج ویڈیو اسکینڈل پر شہباز شریف اور مریم…

سابق وزیراعظم نواز شریف کو سزا دینے والے احتساب عدالت کے سابق جج ارشد ملک کی درخواست پر…

6 گھنٹے

ڈاکٹرز نے زخمی کی بجائے ٹھیک ٹانگ کا…

لاہور کے اتفاق ہسپتال میں ڈاکٹرز نے زخمی بائیں ٹانگ کے گھٹنے کی بجائے دائیں ٹانگ کا آپریشن…

9 گھنٹے

ارے عثمان بزدار شہباز شریف پلس بن گے

برسات کا موسم ب سڑکوں پر کھڑا پانی ، عثمان بزدار کی ڈرائیونگ اور گاڑی میں اور لوڈنگ…

11 گھنٹے
عثمان بزدار کی اشیائے خوردونوش طے شدہ قیمتوں پر دستیابی یقینی بنانے کی ہدایت

ملک چلانے کے لئیے پیسہ نہیں، ٹیکس دے۔…

وزیر اعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ ملک چلانے کے لئیے پیسہ نہیں ہے۔ جیتنا ٹیکس اکھٹا…

13 گھنٹے

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے