بِسمِ اللہِ الرَّحمٰنِ الرَّحِيم

18-August-2019

بجلی اور گیس مزید مہنگی ہو گی

365 Views 0 3 مہینے
بجلی اور گیس مزید مہنگی ہو گی
Posted at 9 مئی-2019

اسلام آباد۔ غریبوں کے نام پر تبدیلی کا نعرہ لگا کر آنیوالی پی ٹی آئی کی حکومت نے پچھلے نو ماہ کے دوران کچھ کیا ہو یا نہ کیا ہو مگر اپنے ووٹرز غریب عوام کی چیخیں ضرور نکلوا دی ہیں حالانکہ عمران خان اپوزیشن کے زمانے میں نوازشریف اور زرداری کی چیخیں نکلوانے کے دعوے کرتے تھے کہ میں انہیں رلاؤں گا۔

اب تک بیچارے عوام کو ہی رلایا جا رہا ہے۔ رواں سال کا وفاقی بجٹ آنے سے پہلے موجودہ حکومت آئی ایم ایف کے پروگرام میں جا رہی ہے۔ لامحالہ اس کا اثر پھر غریبوں پر مہنگائی بم کی صورتحال میں گرایا جائیگا۔ وفاقی حکومت نے عالمی مالیاتی ادارے کی 750 ارب روپے مزید ٹیکس لگانے کی شرط تسلیم کر لی ہے۔

مزید 340 ارب روپے تین سالوں کے دوران نکالے جائیں گے

اب سننے میں آیا ہے آئی ایم ایف کے سامنے مزید گھٹنے ٹیکتے ہوئے عوام پر بجلی اور گیس بڑھانے کی شرط بھی تسلیم کر لی گئی ہے۔ اب عوام کی جیب سے بجلی اور گیس کی مد میں مزید 340 ارب روپے تین سالوں کے دوران نکالے جائیں گے۔ نیپرا کو بجلی کی قیمت کے تعین کیلئے خودمختار ادارہ بنانے کا اصولی فیصلہ بھی کر لیا گیا ہے۔

وفاقی حکومت نے چھوٹے صارفین کے علاوہ بجلی اور گیس کیلئے سبسڈی ختم کرنے کا فیصلہ بھی کیا ہے۔ صنعتی صارفین میں بھی صرف ایکسپورٹ انڈسٹری کو محدود سب سڈی دی جائے گی۔ اوگرا پہلے ہی پٹرولیم مصنوعات کے نرخ کا تعین کرنیوالی خودمختاری باڈی ہے۔

متعلقہ خبریں

جولائی میں محض 30 گاڑیاں رجسٹرڈ ہوئی

ریونیو میں کمی کے باعث محکمہ ایکسائز کو ٹیکس اہداف حاصل کرنے میں مشکلات کا سامنا، گزشتہ برس…

14 گھنٹے

نیا ایپل آئی فون 11 آئندہ ماہ متعارف…

نیویارک۔ موبائل فون نے آج جتنی ترقی کر لی ہے۔ اس کا سوچ کر ہی انسان حیرت کے…

20 گھنٹے
نیا ایپل آئی فون 11 آئندہ ماہ متعارف ہو گا

مارکیٹ 29 ہزار کی نفسیاتی حد سے گر…

کراچی۔ ایم آئی ایف کے پروگرام میں جانے کے بعد توقع کی جا رہی تھی کہ سٹاک مارکیٹ…

21 گھنٹے
مارکیٹ 29 ہزار کی نفسیاتی حد سے بھی گر گئی

عثمان بزدار کا مہنگائی کرنیوالوں کیخلاف کریک ڈاؤن…

لاہور۔ بہت دیر کر دی مہربان آتے آتے۔ پی ٹی آئی حکومت نے اقتدار میں آنے سے پہلے…

1 دن
عثمان بزدار کا مہنگائی کرنیوالوں کیخلاف کریک ڈاؤن کا حکم

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے